وہ 14غذائیں جو مردانہ طاقت کو 14گنا تک بڑھا دیتی ہیں

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ

نبی پاک ﷺ کی احادیث کی روشنی میں مردانہ کمزوری کا علاج کرانا ثواب ہے اس لئے کہ اس بیماری کی وجہ سے حق زوجیت ادا نہیں ہوپاتا اور یہ ایک گناہ ہے مردانہ کمزور ی کا علاج کیا ہے اور یہ کیسے ختم ہو گی اس کے لئے آپ کو چند خوراکیں بتائی جائیں گی۔جس کو استعمال کرنے سے اس بیماری کا علاج ہوگا اور آنے والی نسلیں اس مرض سے محفوظ رہیں گی خوراک کا مردانہ طاقت سے بہت گہرا تعلق ہے جو خوراک ہم روز مرہ زندگی میں استعمال کرتے ہیں وہی معدہ میں ہضم ہو کر خون پیدا کرتی ہے پھر خون سے مادہ تولید تیارہوتا ہے جو زندگی کا جوہر خاص اور لذتوں کا سرچشمہ ہے لہٰذا ایسی غذاؤں کا اہتمام رکھنا چاہئے جن سے مردانہ طاقت ہمیشہ قائم رہے۔کھجور :کھجور کھانے سے قوت باہ میں اضافہ ہوتا ہے جو بچہ پیدا ہو تو اس کو تازہ کھجور کا مالیدہ بناکر تھوڑی سی کھلائی جائے اگر تازہ کھجور نہ مل سکے تو خشک ہی سہی اگر کھجور سے بہتر کوئی اور چیز ہوتی تو اللہ حضرت مریمؑ کو عیسیٰ ؑ کے ولادت وقت وہی چیز کھلاتا سورہ مریم میں ہے کہ اللہ نے حضرت مریمؑ کو حکم فرمایا کہ کھجور کا تنا پکڑ کر اپنی طرف ہلاؤ تم پر تازہ پکی کھجوریں گر پڑیں گی اس سے معلوم ہو ا کہ زچہ کے لئے کھجور سے بہتر کوئی غذا نہیں ۔یہ مزاج میں گرمی اور قوت پیدا کرتی ہے

ابو نعیم نے کتاب الطب میں لکھا ہے کہ رسول اللہ ﷺ کھجور کو مکھن کے ساتھ بہت عزیز رکھتے تھے علماء نے لکھاہے کہ اس کو اس طرح کھانے سے قوت باہ بڑھتی ہے ۔دودھ : اس سے بدن بڑھتا ہے آواز صاف ہوتی ہے ابو نعیم نے حضرت ابن عباس ؓ سے نقل کیا ہے کہ پینے کی چیزوں میں رسول پاک ﷺ کے نزدیک دودھ بہت عزیز تھا یہ قوت باہ پیدا کرتا ہے معدہ میں جلد ہضم ہوجاتا ہے بدن کی خشکی کو دور کرتا منی پیدا کرتا ہے چہرے کا رنگ سرخ کرتا ہے دماغ کو قوی کرتا ہے دودھ میں بہت سے ایسے غذائی اجزاء ہوتے ہیں جو ہماری جلد کو خوبصورتی عطا کرتے ہیں دودھ کیلشیم کے حصول کا بہت بڑا ذریعہ ہے جو ہماری ہڈیوں کومضبوط رکھتا ہے یہ نہ صر بڑھتی عمر کے بچوں کے لئے بلکہ نوجوانوں اور بوڑھوں کے لئے یکساں مفید ہیں اس کو پینے کا بہترین وقت رات ہے ۔شہد :ابو نعیم نے حضرت عائشہ ؓ سے روایت کیا ہے کہ رسول اللہ ﷺ کے نزدیک شہد بہت پیارا اور عزیز تھا حضورﷺ کو شہد اس لئے زیادہ محبوب تھا اللہ نے فرمایا ہے کہ اس میں شفا ہے شہد کے بے شمارفائدے ہیں نہار منہ چاٹنے سے بلغم دور کرتا ہے معدہ صاف کرتا ہے معدہ کو اعتدال پر لاتا ہے دماغ کو قوت دیتا ہے قوت باہ میں تحریک پیدا کرتا ہے

اور اسے مضبو ط کرتا ہے مثانہ کے لئے مفید ہے مثانہ اور گردے کی پتھری کو خارج کرتا ہے پیشاب کو بند ہونے سے کھولتا ہے بھوک زیادہ لگاتا ہے مکھن اور شہد ملا کر کھایا جائے تو جوڑوں کے لئے مفید ہے اور جسم کو موٹا کرتا ہے ۔فلفلدراز :اس کو انگریزی میں لانگ پیپر کہتے ہیں ،پپلی کی بیل ہوتی ہے جو ارد گرد کے درختوں کے سہارے اوپر کو اٹھتی ہے یا زمین پر پھلتی ہے شروع میں جب پکتی ہے تو سرخ ہوتی ہے لیکن سوکھنے سے سیاہ ہوجاتی ہے فلفلدراز جس کو چھوٹی پیپل بھی کہتے ہیں مقوی دماغ مقوی معد ہ اور محرب باہ ہے دودھ میں جوش دے کر پینا بے حد مفید ہے دار چینی لونگ اور کالی مرچ طب نبوی و احادیث میں مردانہ طاقت بڑھانے کی غذائیں ہیں خصوصا بوڑھے شخص کے لئے فائدہ مند ہیں اعصاب و جوڑوں کے درد کے لئے مفید ہیں ۔زعفران:زبر دست مقوی باہ ۔بصارت کے لئے مفید ہے گردے مثانے کو قوت دیتا ہے بخار کی حالت میں دن میں دو بار پانی میں ملاکر کھلایا جائے تو بخار اتر جاتا ہے گردے کے درد میں آرام پہنچاتا ہے

طبیعت میں تقویت دیتا ہے حیض کو مسلسل کرتا ہے شوگر کے مریضوں کے لئے فائدہ مندہ ہے ڈپریشن میں بھی مفید پایا گیا ہے یادداشت کو بڑھاتا ہے زعفران کو دوسری ادویات میں شامل کرنے سے ان کے اثرات کو تیز اور سریع الاثرات بناتا ہے مقوی معدہ ہے۔ہریسہ: یہ جسم میں زبر دست قوت پیدا کرتا ہے مقوی باہ ہے نبی کریم ﷺ نے حضرت جبرائیلؑ سے اپنی جسمانی کمزوری کی شکایت فرمائی تو انہوں نے فرمایا کہ آپﷺ ہریسہ تناول فرمایا کریں کیونکہ اس میں چالیس مردوں کی قوت ہے۔ہریسہ کٹے ہوئے گیہوں گوشت گھی اور مصالحہ ڈال کر پکایا جاتا ہے ۔ہریسہ کھلاڑیوں اور خاص طور پر ویٹ لفٹر کی تقویت کے لئے بہت اچھی چیز ہے ۔ساتویں چیز جانور کی پشت کا گوشت۔پشت کا گوشت تمام گوشت سے بہتر ہے علماء نے لکھا ہے کہ حکمت کی رو سے اس گوشت میں قوت باہ زیادہ ہوتی ہے اور اس گوشت میں قدرتی طور پر وٹامنز اور کیلشیم بہت زیادہ ہوتی ہیں آٹھویں چیز:خوشبو کا روئے انسانی سے خصوصی تعلق ہے اس کا اثر دل و دماغ پر فورا بجلی کی مانند ہوتا ہے خوشبو اور باہ میں گہرا تعلق ہے ، حضور ﷺ کی خدمت میں جب کوئی خوشبو پیش کرتا تو آپ ﷺ اس کو رد نہ فرماتے اور آپ ﷺ کا فرمان ہے کہ کوئی شخص خوشبو دے تو اس کو رد نہ کرے

۔خوشبو کے تحفہ کو رد مت کرو کیونکہ یہ جنت سے نکلی ہوئی ہے آپﷺ کو خوشبو بہت زیادہ پسند تھی آپﷺ ہمیشہ عطر کا استعمال فرمایا کرتے تھے حالانکہ حضورﷺ کے جسم سے ایسی خوشبو نکلتی تھی کہ جہاں سے آپ گزرتے تھے وہ جگہ معطر ہوجاتی تھی آپﷺ فرمایا کرتے تھے مردوں کی خوشبو ایسی ہونی چاہئے کہ خوشبو پھیلے اور رنگ نظر نہ آئے اور عورتوں کے لئے وہ خوشبو ہونی چاہئے کہ خوشبو نہ پھیلے اور رنگ نظر آئے۔نویں نمبر پر ان چار چیزوں کا کثرت سے کھانا ۔چڑیوں کا کھانا،عطرفل جو کہ ایک خاص قسم کی معجون ہوتی ہے ،مغز پستہ کھانا،۔دسویں چیز انڈہ ہے ۔بعض حکماء کے نزدیک انڈے بھی قوت باہ کو بڑھانے کا سبب ہےہیں۔

انڈے میں وہ تمام اجزاء موجود ہوتے ہیں جو صحت کو قائم رکھنے کے لئے ضروری ہوتے ہیں دماغ اور آنکھوں کو بھی تقویت دیتا ہے۔یہ موسم سرما کی غذا بھی ہے ۔ پروٹین فاسفورس اور کیلشیم سے بھر پورہے۔گیارہویں چیز ہے حسیس ۔حضور ﷺ کو حسیس بہت پسند تھا یہ تین چیزوں سے مل کر بنتا ہے کھجور مکھن اور جما ہوا دودھ یعنی میٹھا دہی۔اس سے قوت باہ میں اضافہ ہوتا ہے ۔تھکاوٹ نہیں ہوتی۔صحت بحال رہتی ہیں ۔بارہویں چیز ہے زیر ناف بالوں کو جلد کاٹنا ۔تیرہویں چیز ہے لہسن :امام جلال الدین سیوطی نے اپنی کتاب میں ایک روایت نقل کی ہے کہ حضرت علی ؓ سے مروی ہے کہ رسول ﷺ نے فرمایا کہ اے لوگوں لہسن کھایاکرو کیونکہ اس میں بیماریوں سے شفا ہے اس میں بہت فوائدہ یں یہ ورم کو تحلیل کرتا ہے حیض کو کھولتا ہے معدہ سے ریا نکالتا ہے مرطوب مزاج والوں میں قوت باہ پیدا کرتا ہے منی کو زیادہ کرتا ہے گرم مزاج والوں میں منی کو خشک کرتا ہے معدہ کو فائدہ پہنچاتا ہے ۔ چودہویں چیز زیتون:روغن زیتوں کا کھانا اور مالش کرنا تل اور کھجور ملا کر استعمال کرنا قوت باہ کو بڑھاتے ہیں اور متحرک باہ ہیں۔شکریہ

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.