جس نے وردی میں جنرل مشرف کو آئین میں ترمیم کرنے کی اجازت دی تھی آج وہ خود ہی اس پر تنقید کر رہا د ہے ۔۔۔ مولانافضل الر حمان کو بے نقاب کر دینے والی خبر

لاہور(ویب ڈیسک) سینیئر صحافی عارف حمید بھٹی نے کہا ہے کہ آج مولانا فضل الرحمان اداروں پر تنقید کررہے ہیں، یہ وہی مولانا ہیں جنہوں نے وردی میں جنرل مشرف کو آئین میں ترمیم کرنے کی اجازت دی تھی۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی سے گفتگوکرتے ہوئے سینیر صحافی عارف حمید بھٹی نے کہا ہے کہ

مولانا فضل الرحماان آج اداروں اور حکومت پر تنقید کررہے ہیں یہ وہی مولاانا ہیں جنہوں نے وردی میں ملبوس جنرل مشرف کو آئین میں ترمیم کی اجازت دی تھی۔انہوں نے کہا کہ مولانا بتائیں کے ان کو دو سو روپے پرزمین کس نے الاٹ کی تھی، ایل ایف او کے ذریعے یہ 2002 میں حکومت میں آئے تھے۔ آج یہ حکومت پر تنقید کررہے ہیں۔ جب گزشتہ دور حکومت میں عمران خان اسلام آباد میں لوگ لے کر حکومت کے خلاف دھرنا دے رہے تھےتب مولانا فضل الرحمان کہا کرتے تھے کہ جمہوریت کو چلنے دیا جائے، یہ دھرنے حکومت نہیں سکتے۔عارف حمید بھٹی نے مزید کہا کہ مولانا فضل الرحمان ہمیشہ کہتے رہے کہ سو سال بھی بیٹھے رہو حکومت کہیں نہیں جا رہی، تو اب وہ کیسے امید رکھتے ہیں کہ وہ جلسوں کی مدد سے حکومت گرا دیں گے۔ یاد رہے کہ جمعیت علماء اسلام کے سربراہ قائد جمعیت و پی ڈی ایم کے صدر مولانا فضل الرحمن نے کہا تھا کہ موجودہ نااہل حکومت نے ملک کو سنگین معاشی بحران سے دوچار کر دیا ہے ، نیازی نے نیازی کی تاریخ دہرائی ہے ، عالمی آقائوں کی ایماء پر سازش کے تحت ملک کی معیشت کو تباہ کیا جا رہا ہے ، موجودہ حکمرانوں نے عوامی مینڈنٹ پر ڈاکہ ڈلا ، چور چور کا شور مچا کر اپنی چوری چھپانے کی کوشش کو ہم نے ناکام بنایا دھمکیاں دیکر ہمیں خاموش کرانے والے احمقوں کی دنیا میں رہے ہیں ہمارا احتساب بہت ہو چکا اب حکمراں اپنے احتساب کیلئے تیار ہو جائیں۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.