نواز شریف پر اعتماد نہیں کِیا جاسکتا۔۔!!(ن)لیگ کے کون کونسے رہنماء اپنے ہی قائد پر اعتماد نہیں کرتے؟ اعتزاز احسن کے ناقابلِ یقین انکشافات

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنماء کا چوہدری اعتزاز احسن کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے قائد سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف اعتماد کے معاملے میں صفر ہیں ، ان پر اعتماد نہیں کیا جا سکتا ہے ، نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا

تھا کہ میں نے اپنی پارٹی کو متنبہ کیا ہے کہ مسلم لیگ ن سے بچ کر رہیں۔مسلم لیگ (ن)کے قائد اپنی پارٹی راہنماؤں پر اعتماد نہیں کرتے ہیں، ان کا مزید کہنا تھا کہ میں نے پاکستان پیپلز پارٹی کو متنبہ کیا کہ (ن) لیگ سے بچ کر رہیں۔ نوازشریف فیصلہ کرتے ہوئے پارٹی رہنماوں سمیت کسی پر بھی اعتماد نہیں کرتے۔ان کا کہنا تھا کہ (ن) لیگ کے کئی رہنما بھی نوازشریف پر اعتبار نہیں کرتے۔ اعتزازا حسن کا کہنا تھا اپنی پارٹی سے کہوں گا نوازشریف کیساتھ چلنا مشکل ہے۔نوازشریف کی بداعتمادی کی ایک تاریخ ہے جلاوطنی ہو یا شہباز شریف کو وزیراعظم بنانا ہو۔ نوازشریف کسی سے بھی خیانت کرنے سے دریغ نہیں کریں گے لیکن یہ بات میں ضرور کہوں گا کہ وہ اقتدار کے لیے کسی بھی حد تک جانے کے لیے تیار ہو جاتے ہیں۔اعتزازاحسن نے کہا میاں صاحب مشرف سے ڈیل کر کے سعودی عرب چلے گئے تھے اور ان کے بڑے لیڈر چوہدری نثار، شاہد خاقان عباسی، مشاہد حسین اور خواجہ آصف جیلوں میں قید تھے۔نوازشریف نے اس وقت بھی کسی سے مشورہ نہیں کیا تھا۔پیپلزپارٹی رہنما نے کہا کہ میاں صاحب اپنے پارٹی رہنماؤں پر بھی مشاورت نہیں کرتے۔ انہوں نے شہبازشریف کی بجائے شاہد خاقان عباسی کو وزیراعظم بنا دیا تھا۔دوسری جانب مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ آصف نے بھی پاکستان پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری پر عدم اعتماد کا اظہار کیا ہے۔نجی ٹی کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ’میں بار بار یہی کہوں گا کہ مجھے آصف زرداری پر یقین نہیں ہے، تاہم میاں نواز شریف کی جانب سے بیان سامنے آیا تھا کہ انہیں آصف علی زرداری پر بھرپور اعتماد ہے اور وہ پی ڈٰ ایم کا حصہ رہیں گے ان کی عزت میرے دل میں ہے ،جبکہ سابق وزیر اعظم میاں نوازشریف نے آصف علی زرداری کے خلاف خواجہ آصف کے بیان سے بھی لاتعلقی کا اظہار کیا تھا اور کہا تھا کہ یہ ان کی پارٹی کی پالیسی نہیں ہے۔

Sharing is caring!

Categories

Comments are closed.